اردو زبان میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کا مستند جریدہ

سام سنگ کی معجزاتی بیٹری

1,342

جنوبی کوریائی اور عالمی شہرت یافتہ کمپنی “سیمسنگ” نے ایک ایسی بیٹری تیار کر لی ہے جو حالیہ “لیتھئیم آئن” بیٹریوں کے مقابلے میں 5 گنا زیادہ توانائی فراہم کر سکے گی۔

نئی ٹیکنالوجی میں گریفین graphene نامی مادہ استعمال کیا گیا ہے جو کاربن کی ہی ایک شکل ہے اور جسے سائنسدان “معجزاتی مادہ” قرار دیتے ہیں، یہ ٹیکنالوجی سیمسنگ کے سمارٹ فونز کی بیٹریوں کی استعداد 50 گنا تک بڑھا دے گی۔

گریفین ایک بہت ہی باریک مادہ ہے لیکن یہ فولاد سے 200 گنا زیادہ مضبوط ہوتا ہے، نئی ٹیکنالوجی کی حامل یہ بیٹریاں محض 12 سے 18 منٹ کے اندر پوری طرح چارج ہوسکیں گی۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ وہ اس ٹیکنالوجی کی حامل الیکٹرک کاروں کی بیٹریاں تیار کرنے میں بھی دلچسپی رکھتی ہے کیونکہ الیکٹرک کاروں کی بیٹریوں کو جلد چارج ہونا چاہیے اور دیر تک چلنا چاہیے۔

ماہرین کے مطابق ❞گریفین❝ ایک انرجی ایفیشینٹ مادہ ہے، یہ دیگر کیتھوڈ مٹیریل کے لیے زیادہ جگہ فراہم کرتا ہے، نتیجے کے طور پر گریفین پر مبنی سمارٹ فونز بہت پتلے، ہلے اور زیادہ بیٹری کیپسٹی کے حامل ہوں گے۔

اگرچہ سیمسنگ نے یہ وضاحت نہیں کی کہ اس کے سمارٹ فونز میں یہ ٹیکنالوجی کب استعمال ہوگی تاہم اگر ایسا ہوا تو اس سے سیمسنگ کو عالمی مارکیٹ میں اس کے امریکی حریف ❞ایپل❝ پر ایک بہت بڑی برتری حاصل ہوجائے گی۔

تبصرے
لوڈنگ۔۔۔۔
error: اس ویب سائٹ پر شائع شدہ تمام مواد کے قانونی حقوق بحق ادارہ محفوظ ہیں